بھارت میں تیار کردہ پہلا جنگی طیارہ فضائیہ میں شامل

’تیجس‘ کو روسی ساخت کے مگ 21 طیاروں کی جگہ استعمال کیا جائے گا

بھارت نے مقامی سطح پر تیار کردہ تیجس نامی وہ جنگی طیارہ فضائیہ میں شامل کر لیا ہے جس کی تیاری پر 31 برس قبل کام شروع کیا گیا تھا۔

برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق اس طیارے کو انڈین کمپنی ’ہندوستان ایروناٹکس لمیٹڈ‘ (ایچ اے ایل) نے تیار کیا ہے۔  ’تیجس‘ نامی اس طیارے کو روسی ساخت کے مگ 21 طیاروں کی جگہ استعمال کیا جائے گا۔

 ’ہندوستان ایروناٹکس لمیٹڈ‘ نے ابتدائی طور پر 2 تیجس طیارے بھارتی فضائیہ کو سونپے ہیں۔ تیجس کو ڈیزائن اور تیار تو انڈیا میں ہی کیا گیا ہے لیکن اس کی بعض ٹیکنالوجی، جیسے کہ انجن اور ریڈار بیرون ملک سے درآمد کیے گئے ہیں۔

2011 میں کمپنی نے اس جہاز کو پرواز کے لیے فٹ قرار دیا تھا جسے اب فضائیہ میں شامل کیا گیا ہے۔ ان دونوں جہازوں کو انڈین فضائیہ کے ’فلائنگ ڈیگرز 45‘ اسکوارڈن میں شامل کیا جائےگا۔ 2016 میں بھارتی فضائیہ 6 تیجس جہاز شامل کرے گی جبکہ آئندہ برس مزید 8 جہاز شامل کرنے کا ارادہ رکھتی ہے۔

تبصرے

  • اس پوسٹ پر تبصرے نہیں ہیں!