فیس بک کا مسیجز کو خفیہ رکھنے والی سروس پر کام شروع

فیس بک نےپیغامات خفیہ رکھنے کیلئے ایک نئی سروس کا تجربہ شروع کردیا

فیس بک نے پیغامات کو خفیہ رکھنے کے لیے ایک نئی سروس کا تجربہ شروع کردیا ہے جس کے تحت دو افراد اپنی گفتگو خفیہ رکھ سکیں گے۔  

خفیہ میسجنگ میں ایک ’ ٹائمر‘ آپشن ہوگا جو سلسلہ گفتگو ( تھریڈ) کو آپ کے دئیے ہوئے وقت کے مطابق ازخود تباہ کردے گا۔ یہ آپشن بالکل اسنیپ چیٹ کی طرح کام کرتا ہے جس میں تصاویر اپنے مقررہ وقت پر ختم ہوجاتی ہے، فیس بک کی یہ سہولت اس کے ایک ارب سے زائد صارفین کے لیے دستیاب ہوگی۔ فیس بک کی چیٹنگ میں ایک سرے سے دوسرے سرے تک پوری گفتگو اینکرپٹڈ ہوگی۔

اس طرح حکومتیں اور ہیکرز بھی آپ کی گفتگو نہیں پڑھ سکیں گے، فی الحال یہ فیچر تجرباتی سطح پر ہے اور چند لوگ ہی اسے استعمال کررہے ہیں۔  یہ فیچر اگلے ایک دو ماہ میں یہ فیس بک کے پوری دنیا میں موجود صارفین کے لیے دستیاب ہو گا۔

وائبر اور اسنیپ چیٹ کے مقابلے میں فیس بک کا خفیہ گفتگو کا آپشن آپ کو ازخود ( مینوئلی) سیٹ کرنا ہوگا۔ فیس بک میں میسنجر پراڈکٹ کے سربراہ ٹونی لیچ نے بتایا کہ ان کا ادارہ میسجنگ کو پرائیوٹ اور محفوظ بنانا چاہتا ہے۔ اپنے ایک بلاگ میں فیس بک کے ترجمان نے کہا ہے کہ ’ یہ ون ٹو ون خفیہ گفتگو کا آپشن ہے اور اسے کسی شخص کے مخصوص ڈیوائس ( اسمارٹ فون یا ٹیپلٹ وغیرہ) سے ہی استعمال کیا جاسکے گا اور اسے مجاز شخص ہی وصول کرسکے گا۔

اسی طرح پیغامات کو تالا لگانے یا ’ لاک‘ کرنے کا آپشن بھی فراہم کیا جائے گا جو صرف دو افراد کے مابین پاس ورڈ سے ہی کھلے گا، اس طرح آپ کی سن گن لینے والے اور ہیکرز اس گفتگو کو نہیں پڑھ سکیں گے اور نہ ہی سینسر کرنے والے حکومتیں گفتگو تک رسائی حاصل کرسکیں گی۔

تبصرے

  • اس پوسٹ پر تبصرے نہیں ہیں!