جب تک ظلم کا نظام ہے برکت نہیں ہونی

جب پیسہ انسانوں پر خرچ ہوتاہے تو اللہ تعالیٰ خود ہی برکت ڈال دیتا ہے،عمران خان

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ جس معاشرے میں انصاف، تعلیم اور صحت کی سہولیات مہنگی ہوجائیں تووہ ناکام ہوجاتا ہے۔ وزیر اعظم نے چیک اپ کرانا ہو تو دو ماہ کیلئے باہر چلے جاتے ہیں اور یہاں 50 فیصد پاکستانی اپنے بچوں کو 2 وقت کی روٹی نہیں کھلاسکتے۔

پشاور میں صحت انصاف کارڈ کے اجرا کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ جب تک ظلم کا نظام قائم رہے گا تب تک برکت نہیں پڑے گی۔ ن لیگ نے ایک سال میں اشتہارات پر 9 ارب روپے خرچ کیے جبکہ خیبر پختونخوا حکومت نے صرف 15 کروڑ روپے خرچ کیے۔ جب پیسہ براہ راست انسانوں پر خرچ ہوگا تو اللہ تعالیٰ خود ہی برکت ڈال دیتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ صحت انصاف کارڈ کا اجرا پورے صوبے میں کیا جائے گااور اس میں کوئی تفریق نہیں رکھی جائے ہم نے خیبر پختونخوا میں جو منصوبہ شروع کیا وہ پورے ملک کیلئے مثال بنے گا۔ شوکت خانم ایک مثالی ہسپتال ہے جہاں 70 فیصد لوگوں کا مفت علاج کیا جاتا ہے جبکہ وہاں بلا امتیاز علاج کیا جاتا ہے 5،6 سال پہلے طالبان کا لیڈر بھی شوکت خانم سے علاج کراکے چلا گیا۔

تبصرے

  • اس پوسٹ پر تبصرے نہیں ہیں!