ادا جعفری کی شاعری

  • وہ جو جلوؤں اوٹ چھپا ہے

  • ذکر ان کا ابھی ہو بھی نہ پایا ہے زباں سے

  • ہونٹوں پہ جن کے نام تمنا سے آئے ہیں

  • روز و شب کی کوئی صورت تو بنا کر رکھوں

  • ہونٹوں پر کبھی ان کے مرا نام ہی آئے

  • خود حجابوں سا خود جمال ساتھا

  • اجالا دے چراغ رہ گزر آساں نہیں ہوتا

  • روز و شب کی کوئی صورت تو بنا کر رکھوں